زائرین کی حفاظت سے متعلق وزیراعظم عمران خان کی دلچسپی قابل تعریف ہے، جام کمال

کوئٹہ میں وزیر مملکت برائے داخلہ سے ملاقات کے دوران وزیراعلٰی بلوچستان کا کہنا تھا کہ امید ہے وفاق بلوچستان کے مسائل کا تمام زاویوں سے جائزہ لیکر معاونت کریگا۔ پہلی مرتبہ کسی وفاقی وزیر نے اپنی ٹیم کے ہمراہ اہم ایشو پر صوبے کا دورہ کیا، جو انتہائی خوش آئند ہے۔

اسلام ٹائمز۔ وزیراعلٰی بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ بلوچستان حکومت زائرین کی آمد و رفت کو تحفظ کی فراہمی کے لئے کثیر فنڈز فراہم کر رہی ہے۔ زائرین کی حفاظت اور انہیں سہولیات کی فراہمی کے لئے وزیراعظم عمران خان اور وفاقی حکومت کی دلچسپی قابل تعریف ہے۔ دیگر شعبوں میں بھی وفاق کا تعاون ضروری ہے۔ یہ بات انہوں نے ہفتہ کو زائرین کی سکیورٹی اور انہیں دیگر سہولتوں کی فراہمی کا جائزہ لینے کے لئے اعلٰی سطحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ اس موقع پر وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی، صوبائی وزراء، اعلٰی سول و عسکری حکام نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔ وزیر مملکت کی جانب سے اجلاس کو گذشتہ روز کے دورہ تفتان اور کوئٹہ میں شیعہ ہزارہ قوم کے عمائدین سے ملاقات کی تفصیلات سے آگاہ کیا گیا۔ اجلاس میں زائرین کی آمدورفت کو باقاعدہ بنانے کے لئے مختلف تجاویز پر غور کیا گیا۔ زائرین کے دوروں کا ٹور آپریٹرز کے ذریعے انتظام کرنے پر غور کیا گیا۔ وزیر مملکت نے متعلقہ حکام کو ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ تفتان میں زائرین کے لئے امیگریشن اور کسٹم کی سہولیات کی بہتری اور رہائشی سہولیات میں اضافے کے لئے موثر اقدامات کئے جائیں۔

 

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ زائرین کو سکیورٹی اور سہولیات کی فراہمی کے لئے متعلقہ وفاقی اور صوبائی محکموں اور سکیورٹی اداروں کے مابین موثر روابط قائم کئے جائیں گے، جبکہ کوئٹہ میں ملک کے دیگر صوبوں سے آنے والے زائرین کے لئے رہائش گاہیں بنائی جائیں گی۔ اجلاس سے وزیراعلٰی بلوچستان نے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ بلوچستان کے مسائل کو سمجھے بغیر انہیں حل نہیں کیا جا سکتا۔ ملک کی 45 فیصد رقبے کے حامل صوبے کی ترقی کے لئے کثیر فنڈز درکار ہیں۔ امید ہے وفاق بلوچستان کے مسائل کا تمام زاویوں سے جائزہ لیکر معاونت کرے گا۔ پہلی مرتبہ کسی وفاقی وزیر نے اپنی ٹیم کے ہمراہ اہم ایشو پر صوبے کا دورہ کیا، جو خوش آئند ہے۔ امید ہے وفاق اور بلوچستان میں مزید ہم آہنگی پیدا ہوگی۔ وزیر مملکت برائے داخلہ نے کہا کہ وزیراعظم کی ہدایت پر بلوچستان آیا ہوں۔ اسلام آباد واپس جاکر دورے کی رپورٹ انہیں پیش کرونگا۔ زائرین کی سکیورٹی اور سہولیات کے حوالے سے آئندہ اجلاس پیر کے روز اسلام آباد میں ہوگ